انڈے اس لیے مہنگے ہوئے کیونکہ مرغیاں کرپٹ ہیں..

یہ بات سچ ہے کہ ملک بھر میں مہنگائی نے عوام کا جینا محال کر کے رکھا ہے۔ اشیائے خودنوش کی قیمتیں غریب عوام کی پہنچ سے باہر ہوگئیں ہیں۔ گھی , چینی , دالیں , سبزی حتی کہ ہر چیز کی قیمت آسمان سے باتیں کر رہی ہے۔ مگر مہنگائی کے اس عالم میں جتنی شہرت انڈوں کے حصے میں آئی ہے , اتنی کسی اور پراڈکٹ کو نصیب نہیں ہوئی۔ ایک ہفتے سے مسلسل سوشل میڈیا پر انڈوں کے مہنگا ہونے کی خبریں آرہی ہیں۔ گزشتہ روز بھی سوشل میڈیا پر انڈوں کی مہنگائی کے خوب چرچے رہے ہیں۔ ملک بھر میں فی درجن انڈے 120 روپے سے بڑھ کر 190 روپے تک فروخت ہوے لگے ہیں۔
کئی دنوں سے سوشل میڈیا صارفین مختلف انداز میں مہنگائی پر تنقید کرتے نظر آرہے ہیں۔ بلوچستان کے سابق وزیراعلی نواب اسلم خان رئیسائی اپنے طنز و مزاح کی وجہ سے مقبول ہیں۔
انہوں نے انڈوں کی قیمت پر تبصرہ کرتے ہوئے لکھا کہ انڈے اس لیے مہنگے ہو گئے ہیں کیونکہ مرغیاں کرپٹ ہیں۔ ایک صارف نے کہا کہ عوام وزیراعظم کا مرغی والا منصوبہ اپناتے تو آج انڈے مہنگے نہ خریدنے پڑتے۔ ایک اور صارف نے لکھا کہ مرغیوں اور مافیا کے گٹھ جوڑ سے انڈوں کی قیمت میں اضافہ ہوا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں