ماسک پہنے کا کوئی فائدہ نہیں، وائرس سے نہیں بچاتا۔ (نئی سائنسی ریسرچ)

تحریر : یاسررسول
امریکی ریاست ٹیکساس نے چند ہفتے قبل Mask ضروری پہننے کی پابندی ہٹادی۔ امریکی صحت کے وفاقی ادارے CDC اور اقوام متحدہ دجالیوں کے لیے کام کرنے والے عالمی ڈاکٹرز اور صحت کے ماہرین ٹیکساس گورنر کے اس فیصلے پر چلا اٹھے کہ پاگل ہوگئے ہو کیا یہ کیا کر رہے ہو۔۔۔ فیصلہ فورا واپس لو ورنہ اس فیصلے سے کئی لاکھ ٹیسکاس شہری مفت میں مارے جائیں گے۔

عالمی و امریکی میڈیا نے بھی انکا ساتھ دیتے ہوئے خود پھیلادیا کہ ٹیکساس کا گورنر اپنے غلط فیصلے سے لاکھوں شہریوں کو مروادے گا۔

لیکن سلام ہے ٹیکساس گورنر کو جس نے سچ کا ساتھ دیتے ہوئے ان سب کو رد کردیا اور اب نئی تحقیقی رپورٹ سے انکے مخالفین کے منہ پر تالے لگ گئے ہیں۔

ٹیکساس گورنر کی جانب سے Mask کو بائے بائے کہنے کے بعد ریاست میں حیرت انگیز طور پر کرونا اموات میں کمی دیکھی گئی ہے۔ درحقیقت ٹیکساس نے نیدرلینڈ ماڈل پر چل کر اموات میں کمی کرکے ان تمام عالمی صحت کے ماہرین کے منہ پر زوردار تھپڑ ماردکر انکی پیشہ ورانہ ہدایات کی کلی کھول دی ہے جو کہتے تھے Mask کرونا سے بچاتا ہے یا Mask پہننے سے فائدہ ہوگا۔

رپورٹ کے مطابق ماسک کو رد کرنے کے بعد مسلسل 18ویں روز تک ٹیکساس میں شرح اموات کم سے کم دیکھی گئی ہے اور یہ شرح مسلسل نیچے جارہی ہے۔

دوسری طرف پاکستان میں جہاں بھی Mask ضروری پہننے کی پابندیاں لگائی جارہی وہاں کرونا کیسز مزید سے مزید بڑھنے کی اطلاعات ہیں۔

ثابت ہوگیا کہ صحت کے عالمی ماہرین اور WHO نے Mask ضروری کی جو ہدایات دی ہوئی ہیں وہ سب سو فیصد جھوٹ پر مبنی بلکہ کسی عالمی ایجنڈے کا حصہ ہیں کیونکہ ماسک پہننے کی کوئی بھی سائنسی تحقیق حامی نہیں۔ ہر نئی تحقیق چلا کر کہہ رہی ہے کہ ماسک سے مزید اموات ہورہی ہیں۔

ماسک اور جعلی ٹیسٹنگ کٹس درحقیقت زیادہ سے زیادہ خوف پھیلاکر لوگوں کو مارنے اور غلامی پر مجبور کرنے کا ہتھکنڈہ ہے کیونکہ جب تک لوگ خوفزدہ نہیں ہوں گے کوئی ماسک نہیں پہنے گا، ویکسین نہیں لگوائے گا۔

ماسک لگائے رکھنے سے انسانی مدافعتی نظام مضبوط ہونے کے بجائے الٹا کمزور ہوتا ہے۔ یہ بات میں نہیں کر رکا خود سائنسی تحقیق بتارہی ہے۔ مسلسل ماسک سے انسان بیمار ہونا شروع ہوتا ہے اور جو کوئی بیمار ہو، چاہے اسے ہلکا بخار نزلہ یا زکام ہی ہوجائے تو اسے یہی صحت کے ماہرین جعلی ٹیسٹنگ کٹس کے زریعت کرونا وائرس قرار دیکر معاشرے میں خوف پھیلادیتے ہیں۔ پھر وہی اعداد و شمار حکومت کو دکھاکر کہتے ہیں لاک ڈاوں لگایا جائے ورنہ مزید نقصان ہوگا۔

امریکی معاشی ادارے کی ایک نئی ریسرچ رپورٹ جاری کی گئی ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ لاک ڈاوں لگانے سے کسی طرح بھی وائرس کے پھیلاو یا کمی میں کوئی فرق نہیں پڑا اور نہ ہی ماسک پہننے کی پابندی لگانے سے کوئی خاطر خواہ فائدہ ہوا۔۔۔۔ لہذہ ماسک ضروری کا فیصلہ واپس لینا چاہیے۔

لیکن اس رپورٹ کا عالمی میڈیا نہیں دکھائے گا کیونکہ یہ عالمی ایجنڈے کے ساتھ مطابقت نہیں رکھتا۔

قصہ مختصرا۔۔۔۔

سائنس نہ تو لاک ڈاوں کی حمایت کرتی ہے،
نہ ہی ماسک مینڈیٹ کی۔
بلکہ انکی مخالفت کرتی ہے۔

حمایت صرف Great Reset کے نام پر چلنے والے عالمی ایجنڈے کے حامی لوگ اور میڈیائی لفافے کر رہے ہیں اور ان سب کو نئی ہدایات شیطان کی عالمی اسمبلی UNO کا ادارہ صحت WHO دیتا ہے جسے Great Reset کے بانی 300 صیہونیوں میں سے ایک کٹر صیہونی Bill Gates چلا رہا ہے۔ تاریخ گواہ ہے WHO نے کرونا کے نام پر آج تک جتنے دعوے کیے ان میں سے 99 فیصد جھوٹ ثابت ہوچکے ہیں لیکن عوام کی عقلوں پر جعلی خوف کی وجہ سے پٹیاں پڑ چکی ہیں جس کی وجہ سے انہیں عالمی دجالی کھیل کی چال مکاریاں سمجھ ہی نہیں آرہیں۔

عقل کے اندھے حکمرانوں۔۔۔!

یہودی اقوام متحدہ اور صحت کے نام نہاد منافق ماہرین (جو کہ یہودی WHO اور بل گیٹس کے حکم پر چل رہے ہیں) کی ہدایات پر ہی چلتے رہوگے تو کرونا کے عالمی دجالی کھیل کو کبھی نہیں سمجھ پاوگے۔

کیا ہمارے حکمران بشمول عمران خان، اسد عمر اور صحت کے نام نہاد ماہرین بشمول ڈاکٹر فیصل سلطان، سنجیدہ صحافی برادران اور وڈے چھوٹے دانشوران اس رپورٹ کو پڑھنے کی زحمت کریں گے۔۔۔؟؟

رپورٹ لنک : https://m.washingtontimes.com/news/2021/mar/29/texas-coronavirus-cases-fall-after-mask-mandate-li/?fbclid=IwAR0NmfhUX6nzzZ-9RqSIZ2RcFwm8YVuhd3kS_Vn4dXNamCJoLh1rXE1-x90

نوٹ : خوف کو اپنے دل و دماغ سے مکمل ختم کرکے پرسکون رہیں۔

#TexasLiftedMaskMandate
#AgendaGreatReset
#Agenda31
#Co-Ro-Na-Exposed

اپنا تبصرہ بھیجیں